Monday, 10.23.2017, 11:46pm (GMT+1)
  مرکزی صفحہ
  سوالات
  آر ایس ایس
  روابط
  سائیٹ کا نقشہ
  رابطہ
 
[Advance Search] ::| Keyword:      
فرانس: انتہا پسندی کے خلاف قوانین یا شہری آزادیوں پر قدغن؟ ; ڈنمارک : تارکین وطن اور سماجی گرانٹس ; ڈنمارک : امیگریشن پالیسیاں، ایک خسارہ ; ڈنمارک: پاکستان کے سفیر کی ڈینش وزیر خارجہ سے ملاقات ; ڈنمارک: پاکستان کے سفیر نے اپنی اسناد ملکۂ ڈنمارک کو پیش کر دیں ۔
 
All News  
  ڈینش خبریں
  کالم
  یورپ
  اداریہ
  متفرقات
  مضامین
  ادبیات
  تقریبات
  ڈنمارک میں پاکستانی
  ::| Newsletter
Your Name:
Your Email:
 
 
 
ادبیات
 
جناب ارشاد اللہ خان کی انگریزی نظموں کا یوکرائنی زبان میں ترجمہ
Thursday, 10.12.2017, 02:14pm

پاکستان میں یوکرائن کے درمیان تعلقات کو عوامی سطح پر لانے کے لیے دونوں ممالک کے تہذیبی اورادبی روایتی تعلقات کو ایک حقیقی روحانی بنیاد فراہم کرنے کی ضرورت ہے ۔ا ن خیالات کا اظہارپاکستان میں یوکرائن کے سفیر عزت مآب وولدیمائرلاکومو نے یوکرائن ایمبیسی اسلام آباد اور اکادمی ادبیات پاکستان کے زیر اہتمام ارشادا للہ خان کی انگریزی منتخب نظموں کے یوکرائنی زبان میں تراجم پر مشتمل کتاب کی تقریب رونمائی میں کیا ، اور کہا کہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

قطر : افتخار راغب کا چوتھا مجموعۂ کلام، ’’ یعنی تو‘‘ ۔۔۔ اور
Monday, 10.02.2017, 08:42pm

"مانند خار خشک طوفاں رسیدہ، اپنا حال درہم کیے گریباں دریدہ، میں بوڑھا مقہورستم دیدہ ،  اسد اللہ خاں مردم گزیدہ، زمانے کی روش سے آزردہ ، احباب کی دوستی سے  افسردہ،  جدید شاعری سے خوفزدہ،  غالب  ختم شدہ، بس ایک محفلِ سخن ڈھونڈتا ہوں جو دل میں چمک۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

جدید نظم : تفہیم کا مسئلہ
Monday, 07.17.2017, 08:39am

پاکستان کے گنے چنے ادبی حلقے ایسے بھی ہیں جن میں شعری یا نثری تخلیقات پر باقاعدہ تنقیدی مباحثے ہوتے رہتے ہیں۔ایسی ادبی محافل میں نئے اور پرانے لکھنے والے اپنی اپنی سمجھ بوجھ کے مطابق تنقیدی آرا کا اظہار کرتے ہیں۔ اور ایسے ایسے نادر نکتے نکال لاتے ہیں کہ عقل دنگ رہ جاتی ہے،مثلاً جدید نظم پر بات کرتے ہوئے ۔۔۔

مزاحمتی ادب اور اس کی تشریحات
Friday, 07.14.2017, 08:54am

بیسویں صدی میں بعد از جنگِ عظیم دوئم ایک ایسے دور کا آغاز ہوا جہاں دنیا بھر میں نو آبادیاتی نظام نے دم توڑنا شروع کر دیا تھا۔ یورپی اقوام ، بالخصوص اتحادیوں کی جملہ مقتدر سیاسی جماعتوں کو جنگ کی ہولناک تباہیوں کے پیشِ نظر ان اندیشہ ہائے فکر کا سامنا تھا کہ۔۔۔۔۔۔۔   

چار جنموں کا مسافر، جوگیند پال
Monday, 06.26.2017, 07:46am

جوگیندرپال صرف سادے اور سپاٹ سے افسانہ نگار نہیں ہیں بلکہ وہ ایک مفکّر، دانشور اور اسکا لر بھی ہیں۔ ان کے اندر کا فنکار ہمہ وقت ان اوصاف سے متصادم رہا ہے اور شکست وریخت کا شکار بھی رہتا ہے۔ آپ اتفاق کریں یا  اختلاف لیکن ان کی سنجیدگی و سپردگی، بلاغت و بصیرت سے انکار نہیں کر سکتے۔ ان کا مفکرانہ ذہن، ان کی دانشورانہ بصیرت ۔۔۔۔

نواز نازش کی مسافتوں کے حوالے
Sunday, 06.25.2017, 11:06am

نواز کاوش شروع سے ہی ترقی پسندافکار سے متاثر تھے تاہم ان کے ہاں غزل کا داخلی مزاج اور میلان بھی شروع سے ہی تھا۔ درس و تدریس کے شعبہ سے باوقار طور پر وابستہ ہیں۔ شاعری کا ایک مجموعہ چھپ چکا ہے۔دوسرا مجموعہ''مسافتوں کے حوالے'' اب چھپنے جا رہا ہے۔ ان کے اس مجموعہ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

  » اردو غزل بحیثیت صنف کا آغاز
  » سفرنامہ: سوئے حجاز کا ابتدائیہ
  » ’’آگ کا دریا‘‘ کی فکریات کا جائزہ
  » اردو ادب میں جدید تنقیدی روّیے


 
  ::| Events
October 2017  
Su Mo Tu We Th Fr Sa
1 2 3 4 5 6 7
8 9 10 11 12 13 14
15 16 17 18 19 20 21
22 23 24 25 26 27 28
29 30 31        
 

 Huma Nasar  : Editor
[Top Page]